اسلام آباد: وزیر مملکت برائے داخلہ شہریار آفریدی نے کہا ہے کہ انسانی زندگی کا اللہ کے بعد ماحول پر انحصار ہے،انسانوں کا سوچا جائے گا تو سب بہتر ہوگا، ماحولیات کے لیے بہتر پالیسی اپنانا ہوگی۔تفصیلات کے مطابق وزیر مملکت برائے داخلہ شہریار آفریدی نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ آج عالمی سطح پر گو گرین کی بات کی جارہی ہے، عالمی اسٹیک ہولڈرز بنیادی انسانی ہمدری کو بھول گئے۔وزیر مملکت کا کہنا تھا کہ مشینوں کے ذریعے دنیا پر کنٹرول کے لیے زور دیا گیا۔ انسانی زندگی کا انحصار اللہ کے بعد ماحول پر ہے۔ انسانوں پر پیسہ لگے، انسانوں کا سوچا جائے گا تو سب بہتر ہوگا۔انہوں نے کہا کہ ماحولیات کے لیے بہتر پالیسی اپنانا ہوگی، سب کو پانی کی کمی کے مسئلے پر توجہ دینا ہوگی۔ خوشحالی اور آزمائش میں ہم نے ذمے دار شہری بننا ہے۔شہریار آفریدی کا مزید کہنا تھا کہ نیا پاکستان کا وژن سب کے لیے ہے، شراکت داروں کو عزت دینی ہے۔ مدرسے میں تمام سہولتیں دینا ریاست کی ذمے داری ہے۔انہوں نے کہاکہ آنے والے دنوں میں ملک میں ترقی و خوشحالی آئے گی ۔