جیکب آباد(سومروبی بی سی) تصادم کے نتیجے میں دو خواتین سمیت آٹھ افراد زخمی رندبرادری کے زخمی افراد کا پریس کلب کے سامنے احتجاجی مظاہرہ پولیس کے خلاف نعرے بازی مریٹا برادری کے مسلحہ افراد نے ہمارے گھروں پر حملہ کیازخمی افراد کا الزام  پولیس ملزمان کو گرفتار کرنے کے بجائےہمیں دھمکا رہی ہےرند برادی ‪ کاالزام بی بی سی کے مطابق صدر تھانہ کی حدود بقا پل کے قریب مریٹا اور رند برادری کے دو گروپو میں تصادم دو خوا تیں سمیت آٹھ افراد زخمی ہو گےپولیس کےمطابق رند اور مریٹا برادری کی درمیان تصادم شروع ہوا تصادم کے دوران ڈنڈے اور کلہاڑیوں کے  استعمال سے دو خواتین سمیت آٹھ افراد زخمی ہو گئے جبکہ رند برادر ی سے تعلق رکھنے والے افراد کا زخمیوں کے ہمراہ پریس کلب کے سامنے احتجاجی مظاہرہ کیا اور پولیس کے خلاف شدید نعرے بازی کی متاثرہ افراد نے الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ مریٹا برادری کے مسلح افراد نے صبح سویرے ہماری گھروں پر حملہ کر دیا حملے کے نتیجے میں ہماری خواتین سے آٹھ افراد زخمی ہو گئے اطلاع دینے کے باوجود حدود کی پولیس موقع پر نہیں پہنچی اور  ملزمان کو گرفتار کرنے کے بجائے الٹا ہمیں دھمکا رہی ہے مظاہرین نے اعلی حکام اور آئی جی سندھ سے مطالبہ کیا کہ ملزمان کو جلد از جلد گرفتار کیا جائے اور ہمیں انصاف دیا جائی