ہٹیاں بالا: چہرے پر بیشمار زخم سجائے ہوئے پولیس اسٹیشن ہٹیاں بالا میں سلاخوں کے پیچھے پابند یہ بزرگ ۔۔۔۔کوئی پیشہ ور مجرم نہی ہیں ۔۔۔۔نا ہی انہوں نے ملک کا پیسہ لوٹا ہے ۔۔۔ناہی یہ کسی غیر اخلاقی جُرم کے مرتکب ہوئے ہیں بلکے یہ پیشے کے اعتبار سے معلم ہیں۔۔۔انکا نام پروفیسر جمیل صاحب ہے ۔۔۔۔ انہوں نے قائد اعظم یونیورسٹی سے فزکس میں ڈاکٹریٹ کر رکھی ہے ۔۔۔۔پروفیسر ڈاکٹر نے آج جہلم ویلی کے ڈی سی صاحب کے دفتر میں جاکر ۔۔۔۔پبلک ٹرانسپورٹ میں سگریٹ نوشی کیخلاف درخواست دی ۔۔۔۔اور احتجاج کرا ۔۔۔شاید بزرگ غصے میں کچھ تلخی بھی کر گئے ہونگے جس پر ڈی سی صاحب نے پولیس کے ذریعے اس عظیم اُستاد پر خوفناک تشدد کروا کر ۔۔۔انِہیں سلاخوں کے پیچھے دھکیل دیا ۔۔۔جس معاشرے میں اُستاد اور وہ بھی ایک پی ایچ ڈی اُستاد کی یہ عزت ہو ۔
.